65

متحدہ عرب امارات کا ماہ رمضان میں اشیائے خردونوش پر بڑے ڈسکاؤنٹ کا وعدہ

تحدہ عرب امارات نے رمضان المبارک نے قیمتوں میں اضافے کو روکنے کے لئے خاطر خواہ اسٹاک اور بھاری چھوٹ کی ضمانت دی ہے تاکہ عوام کو ماہ رمضان میں کوئی پریشانی نہ اٹھانی پڑے۔

تفصیلات کے مطابق ماہ رمضان میں بہت سی بنیادی اشیا پر 25 سے 75 فیصد تک کی چھوٹ کی ضمانت دی گئی ہے۔ وزارت اقتصادیات نے اتوار کے روز اعلان کیا کہ رمضان المبارک میں قیمتوں میں اضافے کی اجازت نہیں دی جائے گی جبکہ کافی حصص کی ضمانت ہوگی۔

عمیل کو یقینی بنانے کے لئے وزارت رمضان سے پہلے اور رمضان کے دوران ملک بھر میں دکانوں اور بازاروں میں 420 دوروں کی مہم کا ارادہ رکھتی ہے جو چاند دیکھنے کے لحاظ سے 13 اپریل کو شروع ہونے کا امکان ہے۔

یہ اعلانات متحدہ عرب امارات میں صارفین کے تحفظ کے اقدامات خصوصا رمضان کے حوالے سے اتوار کے روز میڈیا بریفنگ کے دوران سامنے آئے۔ بریفنگ کی قیادت مروان السبوسی ڈائریکٹر اور صارفین کے تحفظ کے محکمہ وزارت اقتصادیات نے کی۔ ان اقدامات کا مقصد آن لائن شاپنگ پلیٹ فارمز سمیت ملک کے مختلف بازاروں میں تاجروں اور صارفین کے مابین “متوازن تعلقات” قائم کرنا ہے۔

ملک میں صارفین کی کوآپریٹوز (جمعیہ) اور آؤٹ لیٹس کے شراکت داروں کے ساتھ وزارت کے اجلاسوں کے نتیجے میں مختلف کوآپریٹوز اور آؤٹ لیٹس کے ذریعہ رمضان ڈسکاؤنٹ مہموں کا ایک سلسلہ جاری کیا گیا ہے۔ بہت سی بنیادی اشیا خصوصا رمضان کے سامان میں 25 سے 75 فیصد کے درمیان رعایت ہوگی۔

السبوسی نے کہا کہ بہت سی انجمنیں اور آؤٹ لیٹ اپنے آن لائن شاپنگ پلیٹ فارم کے ذریعہ خصوصی پیش کش کرتے ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ یہ کوویڈ 19 کے دوران معاشرتی دوری کو برقرار رکھنے اور صحت کی مطلوبہ احتیاطی تدابیر کو برقرار رکھنے کے لئے ضروری ہے۔

الصبوسی نے کہا کہ وزارت نے 2021 کے آغاز سے اب تک 29 کے قریب اجلاس منعقد کئے جن میں چاول ، آٹا ، چینی ، گوشت ، پولٹری ، مچھلی ، دودھ کی مصنوعات کے تاجروں کو نشانہ بنایا گیا ہے۔ ان ملاقاتوں کا مقصد تمام سپلائرز اور تاجروں کے ساتھ ہم آہنگی کی سطح کو بڑھانا تھا۔ متحدہ عرب امارات کو برآمد کرنے والی منڈیوں کے بارے میں معلومات کا تبادلہ اور مارکیٹوں کی ضروریات کو پورا کرنے کے لئے سامان کی دستیابی کو یقینی بنانے کے ان کے منصوبوں کا جائزہ لینا بھی اجلاسوں کا اہم پہلو رہا۔

رمضان المبارک کی تیاریوں ، قیمتوں میں استحکام کو یقینی بنانے اور قیمتوں میں بلاجواز اضافے کو روکنے پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ ملاقاتوں کے دوران سپلائی کرنے والوں نے اشیاء اور مصنوعات کی ضروریات کے لحاظ سے مقامی مارکیٹوں کی ضروریات کو حل کرنے اور سال بھر خصوصا رمضان المبارک کے دوران بنیادی اجناس کی کسی قسم کی کمی سے بچنے کے لئے ضروری اقدامات کرنے کے اپنے عزم کی تصدیق بھی کی۔ اس سے رمضان المبارک کے دوران طلب میں متوقع اضافے کو پورا کرنے میں مدد ملے گی اور اس طرح قیمتوں میں استحکام برقرار رہے گا۔

رمضان کے موسم میں دبئی سے روزانہ اوسطا سبزیوں اور پھلوں کی درآمد لگ بھگ 17،000 ٹن ہوتی ہے جبکہ ابوظہبی کو یومیہ 5،000 ٹن درآمد کیا جاتا ہے۔ اس وقت سبزیوں اور پھلوں کے دستیاب اسٹاک کی مجموعی مقدار تقریبا 130،000 ٹن ہے۔

انہوں نے کہا کہ صارفین 8001222 پر وزارت کے کال سینٹر کال کرسکتے ہیں تاکہ وہ صارفین کے حقوق سے متعلق خراب سلوک کی اطلاع، شکایات، اپنی تجاویز اور مشاہدات پیش کر سکیں۔

رواں سال اب تک مختلف امارات میں حل شدہ شکایات کی مجموعی تعداد 1،412 ہوگئی۔ انہوں نے کہا کہ وزارت دیگر حکام کے ساتھ شراکت میں قومی سطح پر صارفین کی شکایات کے طریقہ کار کو یکجا کرنے کے ایک اقدام پر کام کر رہی ہے اور ان کی شکایات اور مسائل کو کم سے کم وقت میں حل کرنے پر خصوصی توجہ دے رہی ہے۔

مسابقت اور صارف تحفظ محکمہ کے ذریعہ نافذ قوانین ، قانون سازی اور اقدامات سے اطمینان کی سطح 2020 میں بڑھ کر 87 فیصد ہوگئی ہے جو 2019 میں 82 فیصد تھی

ذرائع: گلف نیوز

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں