231

رمضان المبارک کے آخری 10 دنوں میں مکمل کرفیو متوقع

ماہ رمضان کے آخری عشرے میں ملک میں مکمل کرفیو کا امکان ہے۔

تفصیلات کے مطابق روزنامہ القبس کی جاری کردہ خبر میں رمضان المبارک میں کرفیو جاری رہنے یا ختم ہونے کا اہم فیصلہ آج کے وزراء کونسل کے اجلاس میں کیا جائے گا۔

وزراء کی کونسل آج اپنے اجلاس میں ملک میں کورونا وائرس کی پیشرفتوں پر نظرثانی کرے گی جس میں متاثرین اور وائرس سے اموات کی تعداد اور انتہائی نگہداشت میں داخل ہونے والے کورونا مریضوں کی تعداد بھی شامل ہے۔ ماہرین صحت رمضان کے مہینے میں پابندی جاری رکھنے کے لئے دی جانے والی درخواست کی بنیادی صورتحال پر غور کریں گے۔

سرکاری ذرائع نے القبس کو بتایا کہ ماہ رمضان کے دوران پابندی میں توسیع کا فیصلہ اسی ہفتے لیا جائے گا جس کی وضاحت کرتے ہوئے بتایا گیا ہے کہ صحت حکام کی جانب سے وزراء کونسل کو پیش کی جانے والی تفصیلی رپورٹ صحت کے نفاذ میں ناکامی کی نشاندہی کرتی ہیں۔ ایک مدت کے دوران پابندی کو نافذ کرنے کے باوجود ملک میں صحت کی صورتحال میں استحکام نہیں آیا اور پابندی کے باوجود دیوانیوں میں اجتماعات دیکھے گئے ہیں۔

ذرائع نے مزید کہا کہ صحت کے حکام رمضان المبارک میں ہفتہ وار بنیادوں پر پابندی کے نتائج کا اندازہ کریں گے اور امکان ہے کہ یہ جزوی پابندی آخری دس دن کے اندر مکمل پابندی میں تبدیل ہوجائے گی کیونکہ انفیکشن اور اموات کی تعداد میں آخری دس دنوں میں اضافہ متوقع ہے۔

ذرائع کے مطابق صحت کی ضروریات اور شرائط کے مطابق نماز تراویح پڑھنے کی ضرورت پر زور دیا گیا ہے جبکہ انفیکشن منتقلی سے بچنے کے لئے نماز مختصر کردی جائے گی۔

ذرائع نے زور دے کر کہا کہ وزارت صحت کسی بھی قسم کی کوتاہی سے قطع نظر اس پابندی کے نفاذ کے لئے تمام متعلقہ فریقوں سے ہم آہنگی کرے گی۔ رمضان المبارک کے دوران اجتماعات کی نگرانی میں حکومتی ٹیموں کے کردار کو بھی متحرک کیا جائے گا۔

انتہائی نگہداشت میں داخل ہونے والے کورونا مریضوں کے بڑھتے ہوئے واقعات کے بارے میں ذرائع نے انکشاف کیا کہ وزارت صحت انتہائی نگہداشت کے معاملات میں اضافے اور خطرے کی صورت میں مقامی عملے کی مدد کے لئے بیرون ملک سے میڈیکل ٹیمیں طلب کرے گی۔

ذرائع : القبس ۔ کویت اردو نیوز

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں