431

کویت: مئی کے وسط میں وائرس کی شدت کم ہو جانے کے قوی امکانات

رپورٹ کے مطابق صحت سے متعلق مطالعات میں مئی کے وسط میں وائرس کی شدت میں کمی کی پیشن گوئی کی گئی ہے۔ روزنامہ الرائی کے مطابق ملک میں نئے کورونا وائرس کی موجودہ لہر آخری اعداد و شمار اور تشخیص کے مطابق شاید آخری ہوگی اور خاتمے کے قریب ہے جبکہ اس بات کا بھی امکان ہے کہ معاملات میں مئی کے وسط تک بتدریج بہتری آنا شروع ہوجائے گی۔

ذرائع نے بتایا کہ موجودہ لہر کی شدت ٹوٹنے والی ہے۔ انہوں نے امید کا اظہار کیا کہ اس میں 3 سے 4 ہفتوں کے اندر کمی واقع ہوگی اور اس بات کی نشاندہی بھی کی کہ صحت کی سہولیات نے ہسپتالوں میں داخل ہونے والے متاثرین کی تعداد میں کمی اور ویکسین کے ثمرات حاصل کرنا شروع کردیئے ہیں خاص کر عمر رسیدہ متاثرین کی تعداد میں کمی واقع ہوئی ہے جن میں سے اکثر کو پہلے ہی ویکسین دی جا چکی ہے۔

منظور شدہ ویکسین فراہم کرنے میں دنیا کے بہت سے ممالک کو درپیش چیلنجوں کے باوجود ذرائع نے مہم کے آغاز کے پہلے دور کے مقابلے میں ملک میں ویکسی نیشن کی رفتار میں تیزی کی طرف اشارہ کیا جس سے یہ ظاہر ہوتا ہے کہ ویکسی نیشن کی تعداد 10 لاکھ سے تجاوز کر چکی ہے۔

ذرائع نے نشاندہی کی کہ کم سے کم نقصانات اور اس کے بہترین نتائج اور بحران سے نکلنے کا راستہ صرف پابندی عائد کرنے سے ہی حاصل ہوسکتی تھی اسی لئے ملک میں اس وائرس کے آغاز سے ہی اس سے نمٹنے کے لئے سخت فیصلوں کا اطلاق کرنا پڑا۔

ذرائع:الرای ۔ کویت اردو نیوز

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں