200

متحدہ عرب امارات نے بھی بنگلہ دیش ، پاکستان ، نیپال اور سری لنکا کی پروازیں معطل کردیں

متحدہ عرب امارات نے بنگلہ دیش ، پاکستان ، نیپال اور سری لنکا سے آنے والی پروازیں اگلی اطلاع تک معطل کردیں۔

تفصیلات کے مطابق سول ایوی ایشن کی جنرل اتھارٹی اور متحدہ عرب امارات میں نیشنل ایمرجنسی کرائسز اینڈ ڈیزاسٹر منیجمنٹ اتھارٹی نے بنگلہ دیش ، پاکستان ، نیپال اور سری لنکا سے آنے والے مسافروں کے لئے قومی اور غیر ملکی کیریئر کی تمام پروازوں پر پابندی عائد کرنے کا اعلان کردیا ہے۔

پابندی صرف براہ راست آنے والی پروازوں پر ہی نہیں بلکہ ان ممالک سے ٹرانزٹ کے ذریعہ آنے والے مسافروں کی بھی ملک میں داخلے پر پابندی عائد کی گئی ہے۔ امارات نیوز ایجنسی کے مطابق ان ممالک کے مسافروں پر پابندی کا اطلاق بدھ 12 مئی کو رات 11 بج کر 59 منٹ سے ہوگا۔

اس فیصلے میں ان مسافروں کا بھی داخلہ معطل کرنا شامل ہے جو متحدہ عرب امارات آنے سے قبل 14 دن کے لئے بنگلہ دیش ، پاکستان ، نیپال اور سری لنکا میں قیام پذیر تھے تاہم جاری کردہ فیصلے میں یہ بات واضح کی گئی ہے کہ متحدہ عرب امارات سے ان ممالک کے لئے سفر پر کوئی پابندی نہیں ہے اس کے علاوہ تمام تر احتیاطی تدابیر کی سخت پیروی کے ساتھ اماراتی شہری منظور شدہ سفارتی مشن ، سرکاری وفد ، کاروباری طیارے اور گولڈن اقامہ ہولڈرز کو اس فیصلے سے استثنیٰ حاصل ہے۔ فیصلے سے مستثنیٰ گروپس کو حفاظتی اقدامات پر عمل کرنا ہوگا جس میں 10 دن کا گھریلو قرنطین شامل ہے اس کے علاوہ ملک میں داخل ہونے کے فوراََ بعد پہلا PCR ائیرپورٹ پر اس کے بعد دو مزید PCR داخلے کے چوتھے اور آٹھویں دن ہوگا نیز ملک میں داخلے سے قبل مطلوبہ PCR جس کی مدت 72 گھنٹے سے کم کرکے 48 گھنٹے کردی گئی ہے کسی بھی تسلیم شدہ لیبارٹری کے ذریعہ جاری کردہ” کیو آر کوڈ “کے ساتھ ہی قبول کیا جاسکے گا۔

متحدہ عرب امارات کی سول ایوی ایشن اتھارٹی نے تصدیق کی ہے کہ بنگلہ دیش ، پاکستان ، نیپال اور سری لنکا سے دوسرے ممالک کے راستے آنے والے مسافروں کو ان ممالک میں کم سے کم 14 دن قیام کرنا ہوگا تاکہ ملک میں داخلے کی اجازت دی جاسکے تاہم ممنوعہ ممالک اور متحدہ عرب امارات کے مابین کارگو فلائٹس معمول کے مطابق اپنا آپریشن جاری رکھیں گی۔

ذرائع: کویت اردو نیوز

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں