106

کرونا کیسز میں کمی کے بعد اٹلی کا بڑا اعلان

 مہلک ترین وبا کرونا وائرس نے چین کے بعد سب سے زیادہ تباہی اٹلی میں مچائی تھی تاہم اطالوی حکام نے احتیاطی تدابیر پر عمل کرنے سے کرونا پر کافی حد تک قابو ہے اور اٹلی میں حالات اب بہتر ہوتے جارہے ہیں۔

غیر ملکی میڈیا رپورٹ کے مطابق کرونا کیسز میں کمی کے باعث اطالوی وزیر خارجہ لیوگی دی مایو نے کہا کہ اٹلی نے مئی کے وسط سے ہی یورپی ممالک ، برطانیہ اور اسرائیل سے آنے والے مسافروں کے لئے قرنطیبنہ ختم کرنے کا فیصلہ کیا ہے، اٹلی کی وزارت صحت کا کہنا ہے کہ ملک بھر میں کرونا وائرس کی صورت حال میں تیزی سے بہتری آرہی ہے۔

میڈیا رپورٹ کے مطابق کرونا کیسز میں کمی کے باعث اٹلی نے ایک ماہ قبل کرونا کے باعث عائد پابندیوں میں مسلسل نرمی کرنے کا سلسلہ شروع کیا ہوا ہے، یہی وجہ ہے کہ اب پیر سے اٹلی کے مزید تین خطوں سے کرونا وائرس کی پابندیاں کم کرنے کا اعلان کیا گیا ہے۔

رپورٹ کے مطابق جنوبی اٹلی کے کمیبلریا، بیسی لیکاٹا اور پگلیا اورنج سے پیلے زون میں آجائیں گے، اٹلی کی وزارت صحت کے مطابق سیسلی اور سروینیہ زون مزید ایک ہفتے اورنج زون میں رہیں گے۔

یاد رہے کہ گذشتہ سال 2020 کے موسم بہار میں اٹلی میں حالات انتہائی خراب تھے، جب کرونا کیسز اور اس سے اموات کی تعداد میں ہوشربا اضافہ ہوا تھا۔

ذرائع: اے آر واے نیوز اردو

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں