132

پستول لوڈ کر کے ویڈیو بنانے والا ٹک ٹاکر اپنی ہی گولی سے جاں بحق

خیبرپختون خوا کے ضلع سوات میں ہاتھ میں پستول لے کر ٹک ٹاک ویڈیو بنانے والا نوجوان گولی لگنے سے جاں بحق ہوگیا۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق سوات میں بدھ کے روز نوجوان ہاتھ میں پستول لے کر آیا اور اسے لوڈ کر کے اپنی کنپٹی پر رکھ کر ٹک ٹاک ویڈیو بنانا شروع ہوا۔

ویڈیو ریکارڈنگ کے دوران نوجوان سے ٹریگر دبا اور گولی چل گئی، جو اُس کے دماغ کو چیرتی ہوئی دوسری طرف سے باہر نکل گئی اور وہ موقع پر ہی گر گیا۔

رپورٹ کے مطابق یہ واقعہ سوات کی تحصل کبل کے علاقے ماہنٹر میں پیش آیا، جاں بحق ہونے والے نوجوان کی شناخت حمید اللہ کے نام سے ہوئی۔

حادثے کے بعد جائے وقوعہ پر موجود متوفی کے دوستوں نے اُس کے گھر پر اطلاع دی،  جس کے بعد اہل خانہ اُسے اسپتال لے کر پہنچے مگر اُس وقت تک روح جسم سے پرواز کرچکی تھی۔

اسپتال پہنچنے پر ڈاکٹرز نے موت کی تصدیق کی اور ضابطے کی کارروائی کے بعد لاش اہل خانہ کے حوالے کی۔ اس افسوسناک واقعے کی ویڈیو بھی سامنے آئی۔

ذرائع: اے آر وائے نیوز اردو

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں