142

لاہور میں سیکیورٹی گارڈ نے خود کو ڈاکٹر ظاہر کرکے خاتون کی سرجری کر ڈالی

لاہور کے میو اسپتال میں سیکیورٹی گارڈ ڈاکٹر بن گیا اور مبینہ طور پر ایک خاتون کی سرجری بھی کر ڈالی۔

17 مئی کی شام کو خاتون کو پھوڑے کے علاج کیلئے سرجیکل ایمرجنسی میں لایا گیا، لواحقین کا کہنا ہے کہ غلط آپریشن سے خون بند نہ ہوا لیکن پٹی کرکے گھربھجوا دیا گیا۔

اہل خانہ کے مطابق سیکیورٹی گارڈ خود کو ڈاکٹر ظاہر کرکے دو روز تک گھر جا کر مریضہ کی پٹی بھی کرتا رہا، مریضہ کا خون بند نہ ہونے سے حالت بگڑگئی اور دوبارہ اسپتال لایا گیا توحقیقت سامنے آئی۔

ایم ایس میو اسپتال ڈاکٹر افتخار کا کہنا ہے کہ انتظامیہ نے سیکیورٹی گارڈ وحید بٹ کو پولیس کے حوالے کردیا ہے، آپریشن تھیٹر میں ڈیوٹی پر مامور ملازم عثمان بٹ کو بھی معطل کر دیا گیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ واقعے کی تحقیقات کے لیے انکوائری کمیٹی قائم کردی گئی ہے، مریضہ کی حالت تشویشناک ہے،علاج کررہے ہیں۔

وزیرصحت پنجاب ڈاکٹر یاسمین راشد نے واقعے کا نوٹس لیتے ہوئے سیکرٹری ہیلتھ کو تحقیقات کاحکم دے دیا ہے۔

ذرائع: جیو نیوز اردو

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں