253

کویت سے باہر پھنسے ہوئے غیر ملکی اساتذہ کی واپسی کی تاریخ طے کردی گئی

 کویت سے باہر پھنسے ہوئے غیر ملکی اساتذہ کی واپسی کی تاریخ طے کردی گئی ہے۔

روزنامہ الانباء کی رپورٹ کے مطابق شہریوں کی ایئر لائن ٹکٹوں کی زیادہ قیمت کے بارے میں شکایات جزوی طور پر حقیقی ہیں تاہم مکمل نہیں۔ سول ایوی ایشن نے ان عوامل کی طرف بھی اشارہ کیا جو ان میں اضافے کا باعث بنتے ہیں موجودہ صورتحال اور صحت کے تقاضوں کے باعث جہاز میں مسافروں کی کم تعداد کا سفر کرنا اور ٹکٹوں کی ریزرویشن کا وقت بھی ہوائی ٹکٹوں کی قیمتوں کو متاثر کررہا ہے۔ معاشی ذرائع نے ریستوران ، کیفے اور کمپلیکس کے کے اوقات میں توسیع کے فوراََ فیصلہ کرنے کی اہمیت پر زور دیا تاہم انہوں نے یہ بیان کرتے ہوئے کہا کہ موجودہ صورتحال میں شاپنگ مالز اور مارکیٹس میں نمایاں طور پر غیر معمولی بھیڑ کا سامنا ہے جو صحت کی احتیاطی تدابیر کے عزم کے منافی ہیں۔ شاپنگ مالز میں ہجوم متاثرین کی تعداد میں اضافے کا باعث بن سکتا ہے لہٰذا کورونا ایمرجنسی کمیٹی کو اس کا فوری حل تلاش کرنا چاہئے۔

باخبر ذرائع کے مطابق ویکسین وصول کرنے والوں کے لئے صحت سے متعلق کچھ احتیاطی ہدایات کو منسوخ کرنے کا کوئی فیصلہ جاری نہیں کیا گیا ہے اور ماسک پہننے کی ضرورت کو ختم کرنے کا بھی کوئی ارادہ نہیں ہے۔” ممنوعہ ممالک کی فہرست میں نئے ممالک کو شامل کرنے کے بارے میں سوال کے جواب میں ذرائع نے جواب دیا کہ یہ فیصلہ صرف وزراء کی کونسل پر ہے۔

ستمبر میں تعلیمی سلسلے کے آغاز سے قبل 12 سے 16 سال کی عمر کے شہریوں کو کورونا سے بچاؤ کی ویکسین کے بارے میں ایک سوال کے جواب میں ذرائع نے جواب دیا کہ متعدد عوامل اس فیصلے کا تعین کریں گے۔ بارہویں جماعت کے طلباء کو کاغذی ٹیسٹ سے قبل ویکسین وصول کرنے کی سفارش کا بھی فی الوقت کوئی ارادہ نہیں ہے تاہم ملک سے باہر پھنسے ہوئے طلباء کی وطن آمد پر ٹیسٹ کا فیصلہ بھی وزراء کونسل کے ہاتھ میں ہے۔

ذرائع نے انکشاف کرتے ہوئے بتایا کہ کورونا ایمرجنسی کمیٹی نے ملک سے باہر پھنسے ہوئے اساتذہ کی واپسی کی تاریخ طے کردی ہے۔ اساتذہ یکم اگست سے نئے ورک ویزوں پر ملک میں داخل ہوسکتے ہیں۔

ذرائع: کویت اردو نیوز

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں