332

کویت پولیس نے لائسنس کی تجدید کے لئے رشوت لینے پر بنگلادیشی شہری کو گرفتار کر لیا

لائسنس کی تجدید کے لئے رشوت لینے پر بنگلادیشی شہری کو گرفتار کر لیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق عدالت عالیہ نے جج صلاح الحوثی کی زیرصدارت ایک نچلی عدالت کے ذریعہ جاری کردہ فیصلے کے مطابق ایک بنگلادیشی شہری کو مجرم قرار دیتے ہوئے تین سال قید با مشقت کی سزا سنائی۔ کیس کے مطابق بنگلہ دیشی تارکین وطن جس کا نام صدام حسین ہے اور احمدی محکمہ ٹریفک کا ملازم ہے پر الزام ہے کہ وہ گاڑی کے لائسنس کی تجدید کو مکمل کرنے کے لئے لوگوں سے 5 سے 10 دینار تک کا “ہدیہ” مانگتا تھا۔ دوسرے مدعا علیہ پر اس عمل کے لئے سہولت فراہم کرنے اور رشوت لینے اور جرم میں ثالث کا کردار ادا کرنے اور اس دعوے کے تحت ہدیہ طلب کرنے کا الزام تھا کہ وہ وزارت داخلہ کے لئے کام کرتا ہے۔

تفتیش سے یہ بات سامنے آئی ہے کہ بنگلہ دیشی مشتبہ شخص نے گرفتاری سے قبل 30،000 ہزار دینار سے زیادہ رقم وصول کی تھی اور اس رقم میں سے تقریبا 15،000 دینار اپنے ملک منتقل کئے تھے۔ بنگلہ دیشی شہری کے وکیل فادل البصمان نے کہا کہ ان کے مؤکل پر لگائے گئے الزامات بدنیتی پر مبنی تھے اور ان کے پاس خاطرخواہ ثبوتوں کی کمی ہے۔

انہوں نے زور دے کر کہا کہ استغاثہ کے ذریعہ پیش کردہ ویڈیو کلپس آڈیو نہ ہونے کی وجہ سے یا اس کے مؤکل کی شبیہہ کی وجہ سے نتیجہ خیز نہیں ہیں۔

ذرائع: کویت اردو نیوز

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں