157

ایک دلہن کو لینے دو دلہے باراتیوں سمیت پہنچ گئے

ببلو راہیں دیکھتا رہ گیا دوسرا دولہا ووٹی لے کر چلا گیا

شادی کا لڈو جو کھائے پچھتائے جو نہ کھائے پچھتائے۔ویسے تو اکثر اوقات شادی شدہ افراد روتے دھوتے نظر آتے اور کنوارے رہ جانے والے لوگوں کو شادی کی قید میں جانے سے روکنے کی نصیحتیں کرتے نظر آتے ہیں مگر وہ مرد ہی کیا جو شادی کا مزہ نہ چکھے۔یہی وجہ ہے کہ آئے روز شادی کے موضوع کو لے کر دلچسپ خبریں سننے کو ملتی ہیں۔اس وقت بھی ایسی ہی دلچسپ خبر سوشل میڈیا پر وائرل ہے کہ ایک دولہن کو بیاہنے دو دولہے سج دھج کر پہنچ گئے۔جی ہاں ایک نہیں بلکہ دو دو امیدوار شادی کا امتحان دینے کے لیے باراتی لے کر دولہن کے گھر جا دھمکے۔اطلاعات کے مطابق بھارت سے ایک انوکھی خبر آئی ہے جس نے سب کو حیران کر ڈالا ہے، ہمسایہ ملک میں ایک دلہن کو لینے دو دلہے والدین اور باراتیوں سمیت پہنچ گئے۔غیر ملکی میڈیا کے مطابق اترپردیش کے شہر نوئیڈا میں موہنی نامی دلہن کی شادی والدین نے ببلو نامی نوجوان سے طے کی تھی اور رخصتی والے دن ببلو اپنے والدین اور باراتیوں کے ہمراہ پہنچا۔ موہنی کے والدین نے بارات کا شایان شان استقبال کیا۔تاہم اُس وقت عجیب صورت حال پیدا ہو گئی جب ایک اور دلہا اجیت اپنے والدین اور باراتیوں کے ہمراہ دلہن کو لینے پہنچ گیا اور موہنی نے والدین کی پسند ببلو کے بجائے اپنی پسند اجیت کے ساتھ چلی گئی۔مقامی افراد کا کہنا ہے کہ موہنی اجیت نامی لڑکے سے محبت کرتی تھی لیکن اس کے والدین نے اجیت کو رشتہ دینے سے انکار کردیا تھا اور لڑکی کی رضامندی کے بغیر ببلو کو اپنی بیٹی کا ہاتھ دینے کا وعدہ کر بیٹھے تھے۔ببلو اور اس کے ساتھ آنے والے باراتیوں نے موہنی کے دوسرے دلہے کے ساتھ چلے جانے پر شدید احتجاج کیا اور موہنی کے والدین کو برا بھلا کہا جس پر معاملہ پولیس تک پہنچ گیا۔پولیس نے موہنی اور ببلو کے والدین کو گرفتار کرلیا اور بعد میں دوسرے دلہے اجیت کو بھی گرفتار کرلیا۔

ذرائع: اردو پوائنٹ

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں